Meri Shairi Shab-o-Roz

Meri Shaairi: Ba’wafa Ladki

Meri Shaairi: Ba'wafa Ladki

Meri Shaairi: Ba’wafa Ladki

باوفا لڑکی

اس کی نس نس میں وفا تھی وہ بامروّت تھی
افسانوں میں ملتی ہے جو اس میں وہ محبت تھی

تابندگی تاروں کی ماند پڑی، چاند بھی تھک کر سو گیا
پیا ملن کی آس لیے راہ تکنا اس کی عبادت تھی

سورج کی پہلی کرن کے ساتھ میرا دبے پاؤں گھر آنا
سینے سے میری تصویر لگائے ، بنی انتظار کی مورت تھی

بسا اوقات بے رخی سے میرا اس کو ڈانٹ دینا
ہر بات کو ہنس کر سہنا اس کی صابرانہ عادت تھی

میری بے رخیوں کا گلہ کبھی اس کے لب پہ نہ آیا
اس کی آنکھوں میں ہمیشہ ایک سی عقیدت تھی

۔نامکمل ۔

Wafa, Afsana, Murawat, Muhabbat, tabandgi, Chaand, Ibadat, Suraj, Kiran, Tasweer, Intizaar, Moorat, Auqat, Sabar, Aadat, Aankh, Aqeedat

مسعود

Meri Shaairi: Ba’wafa Ladki

Shab-o-roz

About the author

Masood

ایک پردیسی جو پردیس میں رہنے کے باوجود اپنے ملک سے بے پناہ محبت رکھتا ہے، اپنے ملک کی حالت پر سخت نالاں،۔ ایک پردسی جس کا قلم مشکل ترین سچائی لکھنے سے باز نہیں آتا، پردیسی جسکے قلم خونِ جگر کی روشنائی سے لکھتا ہے، یہی وجہ ہے کہ وہ تلخ ہے، ہضم مشکل سے ہوتی ہے، پردسی جو اپنے دل کا اظہار شاعری میں بھی کرتا ہے

Add Comment

Click here to post a comment