نیاموسم نئی امیدیں
Meri Shairi Shab-o-Roz

نیاموسم نئی امیدیں

نیاموسم نئی امیدیں یوں تو جلائے بہت منتوں کے چراغ پر جو سوچا وہ ہو نہ سکا چاھا تھا کہ یہ دوریوں کے داغ دھوؤں، پر دھو نہ سکا کہ محبتوں میں وہ کشش نہ رہی میرا تھا، مگر میرا ہو نہ سکا پہلے پہل بہت رویا...

Read More
Meri Shairi Shab-o-Roz

خواب ساحل کے کیوں دیکھے

خواب ساحل کے کیوں دیکھے خواب ساحل کے کیوں دیکھے، جب بھنور سامنے تھا میں پیاسا کیوں کھڑا رہا جب کہ سمندر سامنے تھا اداسیوں کا مداوا کیسے ہو جب مسیحا ہی نہ چاہے...

Meri Shairi Shab-o-Roz

صنم

صنم آنکھوں کے آشیانے میں تیرا بسیرا ہے صنم لاکھ جفا کرے یہ دنیا‘ تو میرا ہے صنم حق نے جب کائنات سے اسکی طلب جو پوچھی ہر کسی نے مانگی جنت مجھے تو بہتیرا ہے آج...

Meri Shairi Shab-o-Roz

Tamana’oun Ka Shaitan

Tamana’oun Ka Shaitan بہاروں کی تمنا میں دل خزاں بن گیا کیا بتاؤں حال کہ جینا امتحاں بن گیا تیری جستجو میں دھڑکنِ دل بھی تھم گئی تیری آرزؤں میں دشمن جہاں...

Meri Shairi Shab-o-Roz

Khilona

Khilona اُس نے پوچھا:   ’’اے جانِ ارجمند کون سا کھلونا ہے من پسند کھیلے ہوں جس سے عمر بھر بچپن سے لیکر جوانی تلک‘‘ میں نے سوچا اور غور کیا پہلو میں کسی نے شور...