Meri Shairi Shab-o-Roz

Meri Shairi: Aankh aur Dil

آنکھ اور دل آنکھیں کتنی پاگل ہیں اک صدمہ بھی نہ سہہ سکیں پرُنم ہو گئی ہیں بدن کا ہے اک جُز دل پر نہیں اتنا بزدل صد غم سہے پر نہ ہارا ہمت رازِ محبت آشکار ہوا...

Meri Shairi Shab-o-Roz

Meri Shairi: Yadon Ko Sametney Mein…

یادوں کو سمیٹنے میں ماہ و سال پڑے تھے یادوں کو سمیٹنے میں ماہ و سال پڑے تھے داستانِ عشق سننے کو لوگ تیار کھڑے تھے ایک ہی سانس میں سنا دینا میں رودادِ عشق میرے...

Meri Shairi Shab-o-Roz

Meri Shairi: Roag – Qitaa

روگ – ایک قطعہ وہ وقت بھی آتا ہے کہ سورج کی تپش میں لوگ! ہو جاتے ہیں گم سراپا، کرتے ہیں سنجوگ! پھر اے دل کیا غم کہ لوگ کانٹا صفت کہتے ہیں پھول سے چہرے...