Meri Shairi Shab-o-Roz

Meri Shaairi: Mili Hai Woh Zindagi

Meri Shaairi: Mili Hai Woh Zindagi

Meri Shaairi: Mili Hai Woh Zindagi

ملی ہے وہ زندگی،جوہے سوگواربہت

Meri Shaairi: Mili Hai Woh Zindagi

تیری یاد نے کیا ہے دل کو بے قرار بہت
تجھے بھول جانا بھی ہے اسے دشوار بہت

آج تو چلے آؤ دل کے آس بندھانے کے لیے
گو تیری راہوں میں حائل ہیں درودیوار بہت

اندوہ و غم کی بندش ہے، دل ہے اور ہم ہیں
ملی ہے وہ زندگی جو ہے سوگوار بہت

دل کی یہ چند دھڑکنیں بھی تیرے نام کی پابند
تیرے وعدوں پہ کرے دل اعتبار بہت

تم نہ آئے تیرے بعد، موسم بدلے، رتیں بیتیں
ہم رہے مضطرب، اداس گذری بہار بہت

یاد تمہاری آگ لگائے، دل کی اداسی بڑھتی جائے
چہرہ تمہارا رُوبَرُو، آنکھ میری اشکبار بہت

آہی جائے گا قرار بھی، چوٹ ابھی یہ نئی ہے
بھول ہی جاؤنگا مسعودؔ کو، ابھی تو ہے دشوار بہت

مسعودؔ

dar o deewar, dhadkan, dil e beqrar, sogwar, urdu poetry, urdu post, urdu forum, shayeri urdu, zindagi shayeri.

Shab-o-roz

About the author

Masood

ایک پردیسی جو پردیس میں رہنے کے باوجود اپنے ملک سے بے پناہ محبت رکھتا ہے، اپنے ملک کی حالت پر سخت نالاں،۔ ایک پردسی جس کا قلم مشکل ترین سچائی لکھنے سے باز نہیں آتا، پردیسی جسکے قلم خونِ جگر کی روشنائی سے لکھتا ہے، یہی وجہ ہے کہ وہ تلخ ہے، ہضم مشکل سے ہوتی ہے، پردسی جو اپنے دل کا اظہار شاعری میں بھی کرتا ہے

3 Comments

Click here to post a comment

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

November 2018
MTWTFSS
 1234
567891011
12131415161718
19202122232425
2627282930 

PG Special